’شہنشاہ جذبات‘ دلیپ کمار انتقال کرگئے

’شہنشاہ جذبات‘ کہلائے جانے والے لیجنڈری بولی وڈ اداکار یوسف خان المعروف دلیپ کمار طویل علالت کے بعد 98 برس کی عمر میں انتقال کر گئے۔

دلیپ کمار کو طویل عرصے سے سانس میں مشکلات، پھیپھڑوں اور گردوں کی بیماری کی وجہ سے گزشتہ چند سال میں متعدد بار ہسپتال داخل کرایا گیا تھا اور وہ زندگی کے آخری ایام میں بھی زیر علاج رہے۔

دلیپ کمار کو ایک ہفتہ قبل 30 جون کو سانس لینے میں تکلیف کے باعث ایک ہی مہینے میں دوسری بار ہسپتال داخل کرایا گیا تھا، اس سے قبل وہ جون کے شروع میں بھی ہسپتال داخل ہوچکے تھے اور ایک ہفتے تک زیر علاج رہنے کے بعد انہیں گھر جانے کی اجازت دی گئی تھی۔

دو ہفتے قبل ہی دلیپ کمار کے پھیپھڑوں سے کامیابی سے پانی نکالا گیا تھا، تاہم اس کے باوجود انہیں سانس لینے میں تکلیف کی شکایت رہی اور طویل العمری کی وجہ سے ان کے اہل خانہ نے انہیں ہسپتال میں ہی داخل کرانے کا فیصلہ کیا۔

ایک ہفتے سے ہسپتال میں موجود دلیپ کمار کے حوالے سے ان کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل اور بھارتی میڈیا میں خبریں تھیں کہ ان کی صحت بہتری کی جانب گامزن ہے، تاہم 7 جولائی کی صبح کو وہ خالق حقیقی سے جا ملے۔

دلیپ کمار کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل سے ان کے ترجمان فیصل صدیقی کی جانب سے کی گئی مختصر ٹوئٹ میں ‘شہنشاہ جذبات’ کے انتقال کی تصدیق کرتے ہوئے ان کی مغفرت کے لیے دعا کی درخواست کی گئی۔

لیجنڈری اداکار کے انتقال پر جہاں مداحوں نے گہرے دکھ کا اظہار کیا، وہیں بھارتی اور پاکستانی سیاست دانوں، شوبز و سماجی شخصیات نے بھی گہرے دکھ کا اظہار کیا۔

بھارتی صدر اور وزیر اعظم نریندر مودی نے بھی دلیپ کمار کے انتقال پر افسوس کا اظہار کیا جبکہ امیتابھ بچن، اکشے کمار، اجے دیوگن، سلمان خان، شاہ رخ خان، عامر خان، مادھوری ڈکشٹ اور کرینہ کپور سمیت تمام بولی وڈ اداکاروں نے بھی دکھ کا اظہار کیا۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!