سعودی عرب پر حملہ خود پرحملہ تصور کریں گے،امریکا نے واضح حمایت کا اعلان کر دیا

ترجمان وائٹ ہاؤس کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکا ہر قدم پر سعودی عرب کے ساتھ کھڑا ہے۔ اگر سعودی عرب کی سالمیت کو خطرہ ہوا تو امریکا منہ توڑ جواب دیگا۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان وائٹ ہاؤس جین سکی نے بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ امریکا کے سعودی عرب سے دیرینہ تعلقات ہیں۔ اگر سعودی عرب کی سالمیت کو خطرہ لاحق ہوا تو منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب پر حملہ خود پر حملہ تصور کریں گے۔ ترجمان وائٹ ہاؤس کے مطابق نومنتخب امریکی صدر جوبائیڈن جلد خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز سے رابطہ کریں گے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

یاد رہے کہ اس سے قبل جوبائیڈن اپنے ایک بیان میں بھی حوثی باغیوں کے خلاف جنگ میں سعودی عرب کی حمایت کا اعلان کرچکے ہیں۔ دوسری جانب امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ ان کے پاس حوثیوں سے نپٹنے کے بہت سے راستے موجود ہیں۔ انہوں نے ایران پر زور ڈالا کہ وہ حوثیوں کی حمایت کرنا ترک کردے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

محکمہ خارجہ کے ترجمان نیڈ پرائس نے کہا ہے کہ امریکا دیگر ممالک کے ساتھ مل کر ایرانی جوہری معاہدے پر مشترکہ بات چیت کے لیے تیار ہے لیکن ایران نے ابھی تک کوئی مثبت جواب نہیں دیا ہے۔ اس حوالے سے ان کے صبر کا امتحان نہ لیا جائے۔ انہوں نے واضح کیا کہ ایران نے جوہری معاہدے کی پاسداری نہیں کی جس کی وجہ سے امریکا میں تشویش پائی جارہی ہے۔ تاہم انہوں نے واضح کیا کہ جوبائیڈن ایران کے مسئلے کا حل سفارتکاری سے چاہتے ہیں۔ لیکن وہ واضح کرنا چاہتے ہیں کہ جب تک ایران ایٹمی معاہدےکی پاسداری نہیں کرے گا۔ اس پر سے کسی قسم کی پابندی اٹھائی نہیں جائے گی۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!