افغانستان اور ایران سے پاکستان آنے والوں پر عارضی پابندی لگانے کا فیصلہ

5 سے 20 مئی تک ایران اور افغانی شہریوں پر زمینی راستے کے ذریعے پاکستان آنے پر پابندی عائد ہوگی، ایران اور افغانستان میں موجود پاکستانی شہری واپس آسکیں گے۔ وزارت داخلہ کا نوٹیفکیشن

خبر جاری ہے۔۔۔

حکومت پاکستان نے افغانستان اور ایران سے پاکستان آنے پرعارضی پابندی لگانے کا فیصلہ کرلیا ہے، جس کے تحت 5 سے 20 مئی تک ایران اور افغانی شہریوں پر زمینی راستے کے ذریعے پاکستان آنے پر پابندی عائد ہوگی، ایران اور افغانستان میں موجود پاکستانی شہری واپس آسکیں گے۔ تفصیلات کے مطابق حکومت پاکستان کا زمینی راستوں کے ذریعے افغانستان اور ایران سے پاکستان آنے پرعارضی پابندی لگانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔
پابندی کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے، جبکہ وزارت داخلہ کی جانب سے ایران اورافغانستان کو پابندی سے متعلق آگاہ کردیا گیا ہے۔ ایران اور افغانی شہریوں پر زمینی راستوں سے پابندی 5 سے 20 مئی تک برقرار رہےگی۔ 5 مئی شام 6 بجے کے بعد افغانستان اور ایران کے مسافروں پر پابندی عائد ہوگی۔

خبر جاری ہے۔۔۔

مسافروں کے پاکستان سے ایران اورافغانستان جانے پر کوئی پابندی نہیں ہوگی۔

ایران اور افغانستان میں موجود پاکستانی شہری واپس آسکیں گے۔ نوٹیفکیشن میں بتایا گیا کہ افغان شہریوں کو ضروری طبی امداد کیلئے پاکستان آنے کی اجازت دی جائے گی۔ افغانستان اورایران سے آنے والے مسافروں کے کورونا ٹیسٹ کیلئے بارڈر پر طبی عملہ ڈبل کیا جائےگا۔ پابندی کا اطلاق افغان ٹرانزٹ ٹریڈ یا کارگو تجارتی سامان کی گاڑیوں پر نہیں ہوگا۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!