برادراسلامی ملک سعودی عرب نے لاکھوں نادار پاکستانیوں کو قیمتی تحفہ پیش کردیا

سعودی عرب کی جانب سے رمضان پیکج کی مد میں پاکستانی نادار افراد کو 20 ہزار سے زائد راشن پیکج تقسیم کیے جائیں گے۔ ان پیکٹس میں روزمرہ ضرورت کی تمام اشیا مثلا گھی، آٹا، چاول، چینی وغیرہ موجود ہوں گی۔

تفصیلات کے مطابق برادر اسلامی ملک سعودی عرب اپنے پاکستانی نادار بھائیوں کی مدد کے لیے میدان میں آگیا ہے۔ ماہ رمضان کی آمد سے قبل سعودی عرب نے کورونا کی وجہ سے مالی مشکلات کا شکار نادار افراد کی مدد کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور ایسے افراد میں رمضان پیکج تقسیم کیے جارہے ہیں۔ یہ امدادی سامان سعودی شاہ سلمان کے فلاحی ادارے کی جانب سے تقسیم کیا جارہا ہے۔ جس کے 20700 پیکٹس پاکستان پہنچ چکے ہیں اور ان کی تقسیم صوبہ بلوچستان میں کی جارہی ہے۔ ایک اندازے کے مطابق ایک لاکھ 24 ہزار افراد ان پیکٹس سے مستفید ہوں گے۔ ان پیکٹس کا مجموعی وزن 41 کلوگرام ہے۔ جن میں 20 کلو آٹا، 5 کلو چاول، 5 کلو کوکنگ آئل، 2 کلو بیسن، 2 کلو کھجور، 5 کلو چینی اور 1 کلو چائے اور مشروب شامل ہے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

ذرائع کے مطابق ان تمام پیکٹس کا مجموعی وزن 850 ٹن بنتا ہے اور ان کی مالیت 1 ملین ڈالر تک بتائی جارہی ہے۔ یہ سارا سامان این ڈی ایم اے، مقامی حکومت اور ایس ڈی او نامی این جی او کے تعاون سے تقسیم کیا جارہا ہے۔ بلوچستان کے 10 اضلاع کے افراد ان پیکٹس سے فائدہ اٹھا رہے ہیں۔ جن میں دکی، چاغی، واشک، پنجگور، نصیرآباد، خاران ، صحبت پور، سبی اور لورالائی شامل ہیں۔ گزشتہ دنوں اس حوالے سے ایک تقریب بھی منعقد کی گئی جس میں وفاقی وزیر برائے دفاعی پیداوار زبیدہ جلال، سعودی سفیر نواف سعید المالکی اور دیگر نے شرکت کی۔ اس موقع پر زبیدہ جلال کا کہنا تھا کہ سعودی حکومت کی جانب سے اپنے نادار بھائیوں کو یاد رکھنا اور مشکل وقت میں ان کے کام آنا احسن اقدام ہے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

سعودی سفیر نے اس موقع پر بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ امداد کا مقصد پاکستانی عوام کو باور کروانا ہے کہ ہر مشکل گھڑی میں وہ ان کے ساتھ کھڑے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب میں مقیم پاکستانیوں کے مسائل سے بھی آگاہ ہیں اور ان کی مدد کی ہرممکن کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے واضح کیا کہ یہ کوشش مستقبل میں بھی جاری رہے گی۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!