مودی سرکار نے ہوش کے ناخن لے لیے،پاک فوج کی ایک بڑی کامیابی، بھارت سیزفائر معاہدے پر متفق ہوگیا

امن کی جانب اہم قدم، پاکستان اور بھارت سیز فائر پر متفق ہو گئے پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ترجمان میجر جنرل بابر افتخار نے کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت سیز فائر معاہدے پر متفق ہوگئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اور بھارت کے ڈی جی ایم اوز کا ہاٹ لائن پر رابطہ ہوا ہے جس میں لائن آف کنٹرول کی دوطرفہ صورتحال کا جائزہ لیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ دونوں ممالک کے درمیان بنیادی معاملات اور خدشات حل کرنے پر اتفاق کیا گیا ہے۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کے ترجمان میجر جنرل بابر افتخار نے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہاٹ لائن پر ڈی جی ایم اوز کی ملاقات کافی خوشگوار موڈ میں ہوئی۔

خبر جاری ہے۔۔۔

انہوں نے بتایا کہ پاکستان اور بھارت 1987 سے ہاٹ لائن پر رابطہ کررہے ہیں اور اب دونوں ممالک سیز فائر پر متفق ہیں۔ یاد رہے کہ 2014 سے ایل او سی سیز فائر خلاف ورزیوں میں بہت تیزی آگئی تھی۔ 20023 سے 2014 تک ہونے والی 13500 خلاف ورزیوں میں 310 شہریوں کو قیمتی جانوں سے ہاتھ دھونا پڑا جبکہ زخمی ہونے والوں کی تعداد 1600 تک ہے۔ میجر جنرل بابر افتخار نے بتایا ہے کہ 2014 سے اب تک 97 فیصد سیز فائر خلاف ورزیاں عمل میں آچکی ہے۔ اس عرصے میں سال 2018 میں سب سے زیادہ جانی نقصان ہوا جبکہ 2019 میں سب سے زیادہ خلاف ورزیاں ہوئیں۔

خبر جاری ہے۔۔۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے اعلان کیا ہے کہ ڈی جی ایم اوز اس بات پر متفق ہوچکے ہیں کہ کسی کی فوجی چوکی پر براہ راست حملہ نہیں کیا جائے گا۔ یاد رہے کہ یہ رابطہ ایسے وقت میں کیا گیا ہے جب 27 فروری بالکل قریب ہے۔ اس دن پاکستان نے بھارت کی جانب سے کی جانے والی فضائی حدود کی خلاف ورزی پر منہ توڑ جواب دیتے ہوئے بھارت کے دو لڑاکاجہاز مار گرائے تھے جبکہ ایک پائلٹ کو زندہ گرفتار بھی کرلیا تھا۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!