امریکا نے پاکستان پر عائد سفری پابنیوں میں نرمی کا اعلان کردیا، بس چند شرائط پر عمل کرکے شہری سفر کے اہل ہوسکتے ہیں

سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی جانب سے خطے میں کورونا کی صورتحال میں بہتری کے بعد نئی سفری ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکا نے بھارت کے سفری ہدایات کو لیول 4 سے لیول 3 پر کر دیا ہے۔ لیول 4 میں شامل ممالک پر سفری پابندی ہوتی ہے جبکہ لیول 3 کا مطلب شہریوں کو دوبارہ سفر کے لیے نامزد کرنا ہے۔ اسی طرح بھارت نے پاکستان کو بھی لیول 4 سے لیول 3 میں شامل کردیا ہے۔ خطے میں کورونا کی صورتحال کی بہتری کے بعد امریکی سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ نے پیر کو نئی سفری ہدایات جاری کردی ہیں۔ سٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے سنٹر فار ڈیزیز کنٹرول اینڈ پری ونشن کی جانب سے پیر کو جاری کردی بیان کے مطابق بھارت کے لیے لیول 3 کا ٹریول ہیلتھ نوٹس جاری کردیا گیا ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ اگر آپ ایف ڈی اے کی تجویز کردہ ویکسی نیشن مکمل کرلیتے ہیں تو آپ میں کورونا کے نئے ویری ئنٹ سے متاثر ہونے کے چانسز انتہائی کم ہوجاتے ہیں۔ کسی بھی بین الاقوامی سفر کی منصوبہ بندی کرنے سے قبل سی ڈی سی کی ویکسین مکمل کرنے اور ویکسین نہ لگوانے والے مسافروں کے لیے ہدایات لازمی دیکھ لیں۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ کورونا کی وجہ سے بھارت پر دوبارہ غور کیا گیا ہے۔ کیونکہ جرم اور دہشتگردی کی وجہ سے احتیاطی تدابیر بڑھا دی گئیں تھیں۔ یاد رہے کہ 5 مئی کو جاری کی گئی سفری ہدایت کو اب ہٹا دیا گیاہے۔ جس میں بھارت کو لیول 4 میں شامل کیا گیا تھا۔ گزشتہ ماہ جب سفری ہدایت جاری کی گئی تھی۔ تب بھارت میں یومیہ 3 لاکھ سے زائد کورونا کیسز رپورٹ ہورہے تھے۔ اس کے ہسپتالوں کو بستروں اور آکسیجن کی قلت کا سامنا تھا۔

دوسری جانب ڈی ڈی سی نے پاکستان کے لیے لیول 2 کا ٹریول ہیلتھ نوٹس جاری کیا ہے۔ جو کہ بحران کا تبدیل شدہ لیول ہے۔ سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ نے امریکی شہریوں کے لیے لیول 3 رسک کا خدشہ جاری کیا ہے جو کہ سیاحت کے دوران ہے۔ سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ پاکستان کا سفر کرنے کا ارادہ کرنے والے افراد دہشتگردی اور مذہبی فرقہ بازی کی وجہ سے دوبارہ سوچیں۔ اس کے علاوہ کورونا وائرس کے بڑھنے کی وجہ کو بھی دوبارہ دیکھا جائے۔ کیونکہ وہاں کے کچھ علاقے اس وقت رسک پر ہیں۔ اس لیے تمام ٹریول ایڈوائزری پڑھ لیں۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!