متحدہ عرب امارات نے پہلے ایٹمی پاور پلانٹ سے کمرشل پیداوار کا آغاز کردیا، اہم خبر آگئی

متحدہ عرب امارات کے مقامی میڈیا کے مطابق مملکت کے پہلے ایٹمی پاور پلانٹ نے کمرشل بنیادوں پر پیداوار کا آغاز کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کے نائب صدر اور وزیراعظم شیخ محمد بن راشد آل مکتوم کی جانب سے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ٹوئٹ کیا گیا ہے۔ جس میں مختلف تصاویر کے ساتھ اعلان کیا گیا ہے۔ یاد رہے کہ ابوظہبی کے علاقے میں برکہ نیوکلیئر انرجی پلانٹ کے قیام کا مقصد جدید بنیادوں پر توانائی کے شعبے سے ہم آہنگ ہونا ہے۔ انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ عرب دنیا نے ترقی کی ایک اور منزل طے کرلی ہے۔ پہلے ایٹمی پاور پلانٹ سے پہلا میگا واٹ نیشنل گرڈ میں شامل ہوچکا ہے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

انہوں نے بتایا کہ پلانٹ کو 2 ہزار اماراتی انجینئر اور 80 سے زائد بین الاقوامی پارٹنرز کی شراکت کے ساتھ شب وروز محنت کا نتیجہ ہے۔ اس کامیابی کو حاصل کرنے کے لیے 10 سال کا انتظار کرنا پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس پلانٹ کی تیاری سے امارات ترقی کے غیرمعمولی مقام تک پہنچ چکا ہے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

دوسری جانب ابوظہبی کے ولی عہد شہزادہ محمد بن زید النہیان نے بھی ایٹمی پاور پلانٹ کی پروڈکشن کو تاریخی کامیابی قرار دیدیا ہے۔ یہ پاور پلانٹ مملکت کی پچاسویں سالگرہ پر عوام کے لیے تحفہ ہے۔ واضح رہے کہ ایٹمی پاور پلانٹ کے یونٹ ون کو گزشتہ سال نیوکلیئر ریگولیٹر کی جانب سے کام شروع کرنے کا لائسنس جاری کیا تھا۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!