متحدہ عرب امارات کے سکولز میں بچوں کو داخل کرانے کی عمر تبدیل کر دی گئی

متحدہ عرب امارات میں بچوں کو اسکولز میں داخل کرانے کی کم از کم عمر کی حد میں تبدیلی کر دی گئی ہے۔ نالج اینڈ ہیومن ڈویلپمنٹ اتھارٹی (KHDA) کی جانب سے ایک تازہ ترین ٹویٹ میں کہا گیا ہے ”اگر آپ بچوں کو اگلے سال سکول میں داخل کرانے کا ارادہ رکھتے ہیں تو ان کی عمر کی حد میں تبدیلی کی وجہ سے سکول داخلے میں مسئلہ ہو سکتا ہے۔“ KHDAکی جانب سے والدین کو یہ ہدایت بھی کی گئی ہے کہ وہ اس کی آفیشل ویب سائٹ پر جا کر FAQکا سیکشن چیک کریں اس کے علاوہ اماراتی وزارت تعلیم کی جانب سے تمام اسکولز میں بچوں کے داخلے سے متعلق قواعد و ضوابط کا بھی مطالعہ کریں۔ وزارت تعلیم کی قرارداد 24 کے مطابق FS1، FS2، Year 1 اور Year 2 (پری کے جی، کے جی 1، کے جی 2 اورگریڈ 1 میں پہلی بار داخلے کے لیے کم از کم عمر کی حد میں تبدیلی کی جا رہی ہے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

جن اسکولز کا تعلیمی سیشن ستمبر سے شروع ہوتا ہے مثلاً IB، UK اور امریکن نصاب والے اسکولز میں عمر کی حد میں تبدیلی کا آغاز ستمبر 2021ء (تعلیمی سال 2021/22ء) سے ہوگا۔ پری کے جی یا فاؤنڈیشن سٹیج 1 کے لیے 31 اگست 2021ء تک عمر کم از کم تین سال ہونی چاہیے۔ اسی طرح کے جی 1 یا فاؤنڈیشن سٹیج 2 کے لیے داخلے کے وقت بچے کی عمر 31 اگست تک 4 سال ہونی چاہیے۔ کے جی 2 یا ایئر 1 کے سٹوڈنٹس کے لیے داخلے کے وقت عمر 5 سال ہونی لازمی ہے جبکہ گریڈ 1 یا ایئر 2 میں داخلے کے لیے بچے کی عمر 31 اگست2021ء تک 6 سال ہونی چاہیے۔

خبر جاری ہے۔۔۔

عمر کی حد سے متعلق اماراتی اسکولز میں کرائیٹریا پر عمل درآمد اپریل 2022ء کے تعلیمی سیشن میں شروع ہو جائے گا۔ اپریل میں تعلیمی سیشن کا آغاز کرنے والے ان اسکولز میں زیادہ تر بھارتی اور پاکستانی نصاب تعلیم والے اسکولز شامل ہیں۔ جن پر عمر کی حد سے متعلق نیا کرائیٹریا اگلے سال اپریل 2022ء میں (تعلیمی سال برائے 2022/23ء) میں نافذ ہو گا۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!