شارجہ میں تمام کاروباری مراکز اور ریسٹورنٹس و ہوٹلز کے ملازمین پر بھاری شرط عائد ہو گئی

متحدہ عرب امارات میں کورونا کی وبا سے نمٹنے کے لیے انتہائی موثر اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔ گزشتہ چند ہفتوں کے دوران کورونا کیسز کی یومیہ گنتی تین ہزار سے زائد ہونے کے بعد تمام اماراتی ریاستوں نے نئے کورونا قواعد و ضوابط کا اعلان کیا تھا، جن پر سختی سے عمل کروایا جا رہا ہے۔ شارجہ کی حکومت نے تمام ریسٹورنٹس، ہوٹلز اور کیفے ٹیریاز کے ملازمین پر بڑی شرط عائد کر دی ہے۔ میونسپلٹی کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ فوڈ پوائنٹس کے وہ تمام ملازمین جنہوں نے ابھی تک کورونا ویکسین نہیں لگوائی، انہیں ہر دو ہفتے کے بعد پی سی آر ٹیسٹ لازمی کروانا ہو گا، ورنہ ان کے ساتھ ساتھ مالکان کے خلاف بھی کارروائی کی جائے گی۔

خبر جاری ہے۔۔۔

میونسپلٹی کے مطابق ہوٹلز، ریسٹورنٹس اور کیفے ٹیریاز کے جن ملازمین نے ویکسین لگوا رکھی ہے، انہیں دو ہفتے بعد پی سی آر ٹیسٹ کروانے کی کوئی ضرورت نہیں ہو گی۔ وہ ٹیسٹ کی شرط سے مستثنیٰ ہیں۔ میونسپلٹی نے مزید کہا ہے کہ شارجہ کے تمام فوڈ پوائنٹس اور دیگر کاروباری مراکز کے لیے داخلی مقامات پر ایسے سٹیکرز لگانے ہوں گے جن سے پتا چل سکے کہ ان کے تمام ملازمین نے کورونا کی ویکسین لگوا لی ہے یا انہوں نے پی سی آر ٹیسٹ کروا کر نیگیٹو رپورٹ حاصل کر لی ہے۔ شارجہ سٹی میونسپلٹی کی جانب سے فوڈ پوائنٹس پر چھاپے مارے جا رہے ہیں تاکہ وہاں پر کورونا سے بچاؤ سے متعلق احتیاطی اقدامات پر عمل درآمد کا جائزہ لیا جا سکے۔ حکا م نے خبردار کیا ہے کہ تمام میزوں کے درمیان کم از کم دو میٹر کا فاصلہ ہونا ضروری ہے ۔ ایک میز پر دو سے زائد افراد کے بیٹھنے کی اجازت نہیں ہو گی۔
source: Khaleej Times

خبر جاری ہے۔۔۔

Show More

Related Articles

Back to top button
error: Content is protected !!